SHARE

میامی، 03 اپریل (یواین آئی) ہندوستان کی ثانیہ مرزا اور ان کی چیک جوڑی دار باربورا سٹرائکووا یہاں میامی اوپن ٹینس ٹونارمینٹ کے فائنل میں گبرلا ڈابرووسک¸ اور جویفان کے ہاتھوں مسلسل سیٹوں میں چار۔چھ اور تین ۔چھ سے مقابلہ ہارنے کی وجہ سے خاتون کے ڈبلز کے خطاب سے محروم ہوگئیں۔ ٹورنامنٹ میں تیسری سیڈ ہندوستانی چیک جوڑی بہترین کارکردگی کے ساتھ فائنل میں پہنچی تھی لیکن وہ خطابی مقابلے میں غیر سیڈ کھلاڑیوں سے الٹ پھیر کا شکار ہو گئیں۔اس سے پہلے سڈنی انٹرنیشنل میں رنر اپ رہیں ثانیہ-باربورا کے لیے یہ اس سیشن کا دوسرا فائنل تھا جہاں وہ خطاب سے محروم ہوئیں ۔ثانیہ نے برسبین انٹرنیشنل میں امریکہ کی بیتانی ماٹک سینڈس کے ساتھ خطاب جیتا تھا۔ ثانیہ-باربورا نے سیمی فائنل میں اپنی سابق جوڑی دار مارٹینا ھنگس اور چان ینگ-جان کی جوڑی کو تین سیٹ کے سخت مقابلے میں 6-7، 6-1،10-4 سے شکست دے کر فائنل میں جگہ یقینی کی تھی لیکن وہ فائنل میں اپنی فارم کو برقرار نہیں رکھ سکیں۔ دوسری طرف کناڈا کی کھلاڑی ڈابرووسک¸ نے اپنے سیشن کا آغاز مشیلا کرازسیک کے ساتھ کیا تھا لیکن چوٹ کی وجہ سے انہیں نئی جوڑی دار شو کے ساتھ اترنا پڑا۔دونوں کھلاڑی اس سے پہلے ایک ساتھ جوڑی دار یا حریف کے طور پر نہیں کھیلی تھیں لیکن انہوں نے پاریباس اوپن میں ایک ساتھ پریکٹس کی اور میامی اوپن میں خطاب حاصل کیا۔غیر سیڈ ڈابرووسک¸ اور شو کی جوڑی نے فائنل تک پہنچنے کے لیے آٹھویں سیڈ ابگال¸ ا سپیئرس-کیٹرینہ شریبوٹنک، دوسری سیڈ ایکترنا ماکارووا-ایلینا ویسنینا، چوتھی سیڈ آندریا لاواکووا-پینگ شوائی اور تیسری سیڈ ثانیہ -باربورا کی پسندیدہ جوڑیوں کو شکست دے کر خطاب پر قبضہ کیا۔ ڈابرووسک¸ اور شو نے میچ میں پہلے گیم میں شکست کے بعد اگلے نو گیم میں سے آٹھ جیت کر چار-ایک سے برتری بنائی اور اسی فارم کودونوں سیٹوں میں برقرار رکھتے ہوئے اپنا اپنا پہلا پریمیئر مینڈیٹر¸ خطاب جیتا۔ دونوں کھلاڑیوں نے اس ٹورنامنٹ کے لیے جوڑی بنائی تھی اور امید کی جا رہی ہے کہ ایک ساتھ میامی میں کیریئر کا اہم خطاب جیتنے کے بعد دونوں پھر سے ساتھ آنے کے بارے میں غور کریں۔ سال 2016 اگست میں ثانیہ نے اپنی جوڑی دار سوئزرلینڈ کی ھنگس کے ساتھ الگ ہونے کا اعلان کیا اور باربورا کے ساتھ جوڑی بنائی تھی۔ دونوں کھلاڑیوں نے ایک ساتھ سنسناٹی ماسٹرس میں اپنا پہلا خطاب جیتا۔